نصیحت – علامه محمد اقبال

نصیحت
Counsel
بچۂ شاہیں سے کہتا تھا عقابِ سالخورد
An eagle full of years to a young hawk said—
اے ترے شہپر پہ آساں رفعتِ چرخِ بریں
Easy your royal wings through high heaven spread:
ہے شباب اپنے لہُو کی آگ میں جلنے کا نام
To burn in the fire of our own veins is youth!
سخت کوشی سے ہے تلخِ زندگانی انگبیں
Strive, and in strife make honey of life’s gall;
جو کبوتر پر جھپٹنے میں مزا ہے اے پِسَر!
Maybe the blood of the pigeon you destroy,
وہ مزا شاید کبوتر کے لہُو میں بھی نہیں
My son, is not what makes your swooping joy! نصیحت
Counsel
بچۂ شاہیں سے کہتا تھا عقابِ سالخورد
An eagle full of years to a young hawk said—
اے ترے شہپر پہ آساں رفعتِ چرخِ بریں
Easy your royal wings through high heaven spread:
ہے شباب اپنے لہُو کی آگ میں جلنے کا نام
To burn in the fire of our own veins is youth!
سخت کوشی سے ہے تلخِ زندگانی انگبیں
Strive, and in strife make honey of life’s gall;
جو کبوتر پر جھپٹنے میں مزا ہے اے پِسَر!
Maybe the blood of the pigeon you destroy,
وہ مزا شاید کبوتر کے لہُو میں بھی نہیں
My son, is not what makes your swooping joy!
RumiBalkhi.Com
:: ADVERTISEMENTS ::
Share:

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.