دھڑکن چُپ چُپ رہتی – زین شکیل

دھڑکن چُپ چُپ رہتی ہے
کون اِس دل میں ٹھہرا ہے
ہر دم ہنسنے والوں کا
دکھ بھی کتنا گہرا ہے
اک جھلّی سی لڑکی کا
سوچوں پر بھی پہرا ہے
تیرے ہجر کا موسم ہے
میرا درد سنہرا ہے
گھر بھی لگتا ہے جیسے
دکھ کا ایک کٹہرا ہے
دل کو کیسے سمجھاؤں
دل ازلوں سے بہرا ہے
زین شکیل
Share:

Leave a Reply

Your email address will not be published.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.