دل کو غمِ حیات گوارہ ہے ان دنوں – قتیل شفائی

دل کو غمِ حیات گوارہ ہے ان دنوں
پہلے جو درد تھا وہی چارہ ہے ان دنوں
یہ دل ذرا سا دل تیری یادوں میں کھو گیا
ذرے کو آندھیوں کا سہارا ہے ان دنوں
تم آ سکو تو شب کو بڑھا دوں کچھ اور بھی
اپنے کہے میں صبح کا تارا ہے ان دنوں
قتیل شفائی
:: ADVERTISEMENTS ::
Share:

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.