بدلحاظ بن بن کر بھولے – زین شکیل

بدلحاظ بن بن کر، بھولے بھالے نینوں کو
رات بھر بھگوتے ہیں، دکھ اداس لوگوں کے
کیا مجال ہے، پل بھر، غم کو نیند آ جائے
ایک پل نہ سوتے ہیں، دکھ اداس لوگوں کے
راستے جدا بھی ہوں، فرق کچھ نہیں پڑتا
ایک جیسے ہوتے ہیں، دکھ اداس لوگوں کے
زین شکیل
Share:

Leave a Reply

Your email address will not be published.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.